ایشیائ ممالک کی روزانہ کی بنیاد پر ویکسین لگانے کی کل تعداد کی فہرست میں فلپائن سرفہرست

فوٹو بشکریہ عرب نیوز

منیلا: ملک کے ویکسین پروگرام کے سربراہ وزیر کارلیٹو گالویز جونیئر نے کہا ہے کہ فلپائن ہر روز کوویڈ-19 کے مقابلے میں سب سے زیادہ لوگوں کو ٹیکہ لگا رہا ہے اور اپنے ویکسین پروگرام کے ساتھ ایشیاء کے بڑے ممالک کی فہرست میں سرفہرست ہے۔ پیر کی رات صدر روڈریگو ڈوٹرٹے کے قوم سے خطاب کے دوران پیش کی گئی اپنی پیشکش میں گالویز نے مزید کہا کہ فلپائن نے حکومت کے بڑے پیمانے پر ویکسین لگانے کے پروگرام کے مطابق جمعہ کے روز لگائ گئی کوویڈ-19 ویکسین نے پانچ ملین کا ہندسہ عبور کر لیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہم نے مارچ اور اپریل میں اپنی پیداوار میں تین گنا اضافہ کیا ہے جہاں ہم نے 40 دنوں میں صرف دس لاکھ ٹیکے لگائے۔ اب مئی ختم ہونے سے پہلے ہی ہم نے تیس لاکھ (لوگوں) کو ٹیکے لگائے ہیں۔ مزید کہا فلپائن نے مسلسل دو ہفتے ایک ملین فی ہفتہ ویکسین لگانے کا ریکارڈ بھی قائم کیا۔

 مئی 30 تک مجموعی طور پر 5,180,721 خوراکیں دی جا چکی تھیں۔ ان میں سے 3,974,350 افراد نے پہلی خوراک حاصل کی ہے جبکہ 1,206,371 افراد کو دونوں خوراکوں کے ٹیکے لگائے گئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ دس لاکھ سے زائد افراد کے برابر ہے جنہیں کوویڈ-19 کے خلاف مکمل طور پر ٹیکے لگائے گئے تھے۔ “فلپائن نے سب سے زیادہ پیداوار حاصل کر لی ہے، انہوں نے انڈونیشیا، ملائیشیا، سنگاپور اور تھائی لینڈ کے حوالے سے کہا کہ ایشیاء کے پانچ بڑے ممالک میں سے ایک ہے۔ “اس کا مطلب ہے کہ ہمارے پاس ہر روز سب سے زیادہ ویکسین لگائی جاتی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے روزانہ ٹیکے لگانے کے لحاظ سے تھائی لینڈ اور انڈونیشیا کو پیچھے چھوڑ دیا ہے۔

سرکاری اعداد و شمار کے مطابق اب حکومت روزانہ کوویڈ-19 ویکسین کی 150,000 خوراکیں دیتی ہے۔ گالویز نے کہا کہ وہ یہ بھی توقع کرتے ہیں کہ جولائی تک ملک میں ویکسین کی فراہمی مستحکم ہو جائے گی کیونکہ کوویکس کی سہولت یعنی دنیا بھر میں ایک ایسا اقدام ہے جس کا مقصد کوویڈ-19 ویکسین تک مساوی رسائی ہے۔

انہوں نے امریکی صدر جو بائیڈن کے کوویڈ-19 ویکسین کی 80 ملین خوراکیں دیگر ممالک کے ساتھ شیئر کرنے کے فیصلے پر بھی تبادلہ خیال کیا جس میں فلپائن کو اس کے اولین ترجیحی وصول کنندگان میں سے ایک قرار دیا گیا ہے۔ گالویز نے کہا کہ کاروباری شعبہ بھی مزید ویکسین تیار کرنے کے لیے تیار اور پرعزم ہے۔

“آپریشنل ویکسینیشن سائٹس کی تعداد ملک میں ویکسین کی موجودہ فراہمی پر مبنی ہے۔ گالویز نے کہا کہ اضافی سپلائی آنے کے بعد فعال سائٹس کی تعداد میں اضافہ ہوگا اور ہماری ویکسینیشن کی رفتار میں اضافہ ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کا مقصد 2021 کی تیسری سہ ماہی میں روزانہ کے ٹیکے بڑھا کر 5 لاکھ اور پھر چوتھی سہ ماہی تک روزانہ 7 لاکھ 40 ہزار ویکسین شاٹس تک بڑھا کر ریوڑ کے قوت مدافعت کے اہداف تک پہنچنا ہے۔ 

منگل کو گالویز نے ایک فورم میں کہا کہ فلپائن کی حکومت فلپائنی باشندوں میں ویکسین کی ہچکچاہٹ سے نمٹنے کے لیے اپنی حکمت عملی کو ازسرنو وضع کر رہی ہے اور مزید جانوں کے تحفظ اور ملک کی معاشی بحالی کو تیز رفتاری سے آگے بڑھانے کے لیے کوویڈ-19 کے بعد کی حکمت عملی تیار کرنے میں نجی شعبے کے ساتھ مل کر کام کر رہی ہے۔

انہوں نے کہا کہ افراد کو ٹارگٹ کر کے اب ہم اپنی توجہ خاندانوں پر مرکوز کر رہے ہیں جو ہمارے معاشرے کی بنیاد ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمیں یقین ہے کہ خاندان کے معتبر افراد کی جانب سے زبانی الفاظ ہمارے ویکسینیشن پروگرام کے بارے میں عام لوگوں کے تاثر کو مثبت طور پر متاثر کرنے میں مدد گار ہو سکتے ہیں۔

اردو پبلشر کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں