پاکستان کی طرف سے ‘حماس ہیڈ کوارٹر’ پوسٹ کے لئے، شفاء انٹرنیشنل ہسپتال کی تصویر کے استعمال کی مذمت

فوٹو بشکریہ عرب نیوز

اسلام آباد: دفتر خارجہ کے ترجمان زاہد حافظ چوہدری نے کہا ہے کہ پاکستان نے ایک اسرائیلی سیاستدان کی جانب سے دارالحکومت اسلام آباد میں ایک ہسپتال کی تصویر استعمال کرنے پر “استثنیٰ” اختیار کیا ہے جس میں اس نے دعویٰ کیا ہے کہ یہ حماس کا ہیڈ کوارٹر اور “غزہ کا سب سے بڑا میڈیکل کمپلیکس” ہے۔

چودھری نے عرب نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہم نے اسرائیل کے سابق وزیر جنگ کا بیان دیکھا ہے اور ہم سمجھتے ہیں کہ یہ زیادہ سے زیادہ معمولی غلط فیصلہ ہے اور جان بوجھ کر غلط بیانی کی گئی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہم اس حقیقت سے بھی سنجیدگی سے استثنیٰ لیتے ہیں کہ بیان میں ایک پاکستانی عمارت کا غلط حوالہ دیا گیا ہے۔

گزشتہ ماہ سے پاکستان نے فلسطین کی حمایت اور غزہ کی پٹی میں اسرائیلی فضائی حملوں کے خلاف بین الاقوامی حمایت کو متحرک کرنے کے لیے سفارتی کردار ادا کیا ہے۔ ان حملوں میں 10 مئی سے 21 مئی کے درمیان فلسطینی علاقے میں جنگ بندی کے اعلان سے پہلے 240 سے زائد افراد ہلاک ہوئے تھے۔ 20  مئی کو اسرائیلی سیاست دان اور سابق وزیر جنگ نفتالی بینیٹ نے ٹویٹر پر ایک ویڈیو پوسٹ کی جس میں ایک اسپتال کی تصویر دکھائی گئی جس میں انہوں نے کہا کہ یہ “غزہ کا سب سے بڑا طبی کمپلیکس” اور حماس کا ہیڈ کوارٹر ہے جہاں سے یہ گروہ “اسرائیل کے خلاف دہشت گردی کی کارروائیاں” کر رہا ہے۔

سوشل میڈیا صارفین نے فوری طور پر بتایا کہ یہ تصویر اسلام آباد کے شفاء انٹرنیشنل ہسپتال کی ہے۔ مشرق وسطیٰ کے حوالے سے وزیر اعظم عمران خان کے خصوصی نمائندے طاہر محمود اشرفی نے بینیٹ کی ویڈیو کو دنیا کو گمراہ کرنے کی دانستہ کوشش قرار دیا ہے۔

اشرفی نے عرب نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اسرائیل مسئلہ فلسطین کو اجاگر کرنے میں پاکستان کے فعال کردار اور پوری دنیا کے سامنے اسرائیلی مظالم دکھانے کی وجہ سے مایوس ہے۔ انہوں نے کہا کہ یہ دنیا کو گمراہ کرنے اور دھوکہ دینے کی دانستہ کوشش ہے کیونکہ اسرائیل نے غزہ میں صحت کی حقیقی سہولیات کو تباہ کر دیا ہے۔

ہم پاکستان کو بدنام کرنے کی اس کوشش کی مذمت کرتے ہیں۔ اشرفی نے مزید کہا: “پاکستان ایک آزاد فلسطینی ریاست کے قیام اور القدس الشریف کو اپنا دارالحکومت بنانے تک فلسطینی عوام کی حمایت جاری رکھے گا۔”  شفاء کے ترجمان شجاع رؤف نے کہا کہ یہ واضح ہے کہ شفاء انٹرنیشنل اسپتال (ایس آئی ایچ) اسلام آباد کی تصویر غلطی سے دکھائی گئی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ایس آئی ایچ پاکستان کا نجی شعبے کا معروف اسپتال ہے جو جوائنٹ کمیشن، امریکہ سے تسلیم شدہ ہے۔ یہ اسپتال 28 سال سے پاکستانیوں کو معیاری صحت کی دیکھ بھال کی خدمات فراہم کر رہا ہے۔ اس کے مطابق ہم مذکورہ تصویر کو ہٹانے پر زور دیتے ہیں، رؤف نے کہا۔

اردو پبلشر کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں