ہندوستان میں ایک سال میں 4,05,861 خواتین کے ساتھ زیادتی

ہندوستان میں ایک سال میں 4,05,861 خواتین کے ساتھ زیادتی
Image Source-Google|Image by- thelogicalindian

نئی دہلی: 29 ستمبر 2020 کو جاری کیے گئے سرکاری اعدادوشمار کے مطابق۔
بھارت میں 2019 میں روزانہ اوسطا 87 زیادتی کے واقعات درج ہوئے اور ایک سال کے دوران واتین کے ساتھ زیادتی کے مجموعی طور پر 4،05،861 واقعات ، جو 2018 سے 7 فیصد سے زیادہ ہیں ۔
یہ نتائج اترپردیش کے ہاتراس میں ایک دلت خاتون کے ساتھ اجتماعی زیادتی اور بربریت پر بڑے پیمانے پر غم و غصے کے درمیان سامنے آئے ہیں۔ اس خاتون کا انتقال ہوگیا۔
قومی جرائم ریکارڈ بیورو (این سی آر بی) کے مرتب کردہ اعداد و شمار سے ظاہر ہوتا ہے کہ2018 میں ملک میں خواتین کے ساتھ زیادتیے 3،78،236 واقعات ریکارڈ ہوئے۔
اعداد و شمار سے پتہ چلتا ہے کہ 2019 میں زیادتی کے کل 32،033 واقعات درج کیے گئے ، جو سال کے دوران خواتین کے خلاف ہونے والے تمام جرائم کا 7.3٪ تھا۔
پچھلےسالوں کے اعدادوشمار کے مطابق ، 2018 میں ، ملک بھر میں 33،356 عصمت دری ریکارڈ کی گئیں ، جو 2017 میں 32،559 تھیں۔
یہ اعدادوشمار دکھاتے ہیں کہ فی لاکھ خواتین آبادی میں درج جرائم کی شرح 2019 میں 58.8 کے مقابلے میں 2019 میں 62.4 رہی۔
این سی آر بی ، جو مرکزی وزارت داخلہ کے ماتحت کام کرتا ہے ، کو یہ ذمہ داری عائد کی گئی ہے کہ وہ تعزیرات سے متعلق اعداد و شمار کو جمع کرنے اور اس کا تجزیہ کرے جس کے مطابق ہندوستانی تعزیراتی ضابطہ اور ملک میں خصوصی اور مقامی قوانین کی تعریف کی گئی ہے۔

اردو پبلشر کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں