اسرائیلی انٹیلی جینس صرف ایک مِس کال سے موبائل فون ہیک کرسکتی ہے

اسرائیلی انٹیلی جینس صرف ایک مِس کال موبائل فون ہیک کرسکتی ہے
Image Source-Google|Image by- BBC

خبردار، کلک کیے بغیر، کال وصول کیے بغیر، صرف ایک مِس کال سے بھی آپ کا موبائل فون ہیک ہوسکتا ہے۔ برطانوی نشریاتی ادارے کی رپورٹ کے مطابق پچھلے سال الجزیرہ کے 36 صحافیوں کو ایسی ہیکنگ سے واسطہ پڑا۔

پیگاسس اسپائی ویئر کیا ہے، کیسے کرتا ہے کام؟

اس تکنیک کو اسرائیلی سائبر سکیورٹی کمپنی این ایس او نےتیارکیا ہے۔اسپائی ویئر ایک ایسا سافٹ ویئر پروگرام ہے جو آپ کے کمپیوٹر اور موبائل سےخفیہ اورنجی جانکاری چرا لیتا ہے۔ کسی کی نگرانی کرنے کے لئے پیگاسس آپریٹر ایک خاص لنک تیار کرتا ہے اور صارف سے اس پر کسی بھی طرح سے کلک کرواتا ہے۔لنک پر کلک کرنے کے بعد آپریٹر کو صارف کے فون کی سکیورٹی میں نقب لگانے کا حق مل جاتا ہے اور وہ پیگاسس کو بنا صارف کی منظوری اور جانکاری کے اس کے فون میں انسٹال کر دیتا ہے۔

فون کی سکیورٹی میں نقب لگنے اورپیگاسس انسٹال ہونے کے بعد آپریٹر مقبول عام موبائل میسجنگ ایپس کے سہارے صارف کےپاس ورڈ، کانٹیکٹ لسٹ، کلینڈر ایونٹس، ٹیکسٹ میسیجز اور لائیو وائس کال کی جانکاری حاصل کر سکتا ہے۔ اس کے ساتھ آپریٹر صارف کی سرگرمیوں کی جانکاری کے لئےفون کے کیمرے اور مائیکروفون کو بھی آن کر سکتا ہے۔حالیہ معاملے میں جس طرح سے وہاٹس ایپ کےسہارے لوگوں کے فون میں نقب زنی کی گئی ہے اس میں کسی لنک کو بھی کلک کرنے کی ضرورت نہیں تھی اور یہ کام صرف ایک مسڈ ویڈیو کال سے ہی ہو گیا، جس میں صارف کو اس ویڈیو کال کا جواب دینے کی بھی ضرورت نہیں تھی۔

کینیڈا میں قائم انٹرنیٹ اور سائبر سیکورٹی کے ادارے کی رپورٹ میں انکشاف کیا گیا ہے, کہ رواں سال جولائی اور اگست میں اسرائیل کے جاسوسی ادارے این ایس او کے پیگاسس اسپائی ویئر کے ذریعے اِن صحافیوں کے فون کو ہیک کیا گیا۔

ماہرین کے مطابق ایسی ہیکنگ کو زیرو کِلک کا نام دیا جاتا ہے، جس میں ہیکر اپنے ہدف کو محض ایک مِس کال دے کر ہیک کرلیتے ہیں۔

فیس بک کی ملکیت والے پلیٹ فارم وہاٹس ایپ نے کہا، مئی میں ہم نے ایک حملے کو روکا جہاں ایک انتہائی جدید سائبر اسپائی ویئر نے صارف کے آلات پر میل ویئر قائم کرنے کے لئے ہماری ویڈیو کالنگ کی سہولت کا فائدہ اٹھایا۔

وہاٹس ایپ نے ایک چونکانےوالا انکشاف کرتے ہوئے کہا ہے

کہ ہندوستان میں بھی عام انتخابات کے دوران صحافیوں اورہیومن رائٹس کارکنوں پر نگرانی کے لئے اسرائیل کے اسپائی ویئر پیگاسس کا استعمال کیا گیا۔ یہ انکشاف سین فرانسسکو میں ایک امریکی یونین عدالت میں منگل کو دائر ایک مقدمہ کے بعد ہوا, جس میں وہاٹس ایپ نے الزام لگایا کہ اسرائلی این ایس او گروپ نے پیگاسس سے تقریباً1400 وہاٹس ایپ صارفین کو نشانہ بنایا۔

اردو پبلشر کی پالیسی کا کمنٹس سے متفق ہونا ضروری نہیں